""""غزل"""""

Go down

""""غزل"""""

Post by Mr.TaRaR on Wed Dec 20, 2017 4:50 pm

ہوس کی آگ میں جلتے بشر پہ لعنت ہو
نہیں ہے جس میں حیا اُس نظر پہ لعنت ہو

ترے پڑوس میں کتنے غریب بُھوکے مرے
امیرِ شہر ترے مال و زر پہ لعنت ہو

ترس رہے ہیں کئی لوگ جھونپڑی کےلیے
ترے محل ترے شیشے کے گھر پہ لعنت ہو

کہ جس کے در سے سوالی ہی خالی لوٹ آئے
فقط وہ نام کے حاتم کے در پہ لعنت ہو

جہاں غریب کی سُنتا نہ ہو صدا کوئی
منافقوں کے وہ سارے نگر پہ لعنت ہو

جہاں غلامی چلی آ رہی ہو نسلوں سے
تو ایسی زیست پہ ایسی گُزر پہ لعنت ہو

کسی کی بیٹی کی عزت کو جو کچل ڈالے
ہر ایسے شخص کی گندی نظر پہ لعنت ہو

وہ جن کے واسطے انصاف بیچ دے منصف
سبھی حرام کے لعل و گہر پہ لعنت ہو

کہ جس کا کام ہو تکلیف دینا لوگوں کو
فقط وہ نام کے مُسلم بشر پہ لعنت ہو

جو دھوکا دے کے کماتا ہو رزق اے باقرؔ
تو ایسے شخص پہ اُس کے ہُنر پہ لعنت ہو

مُــــــــــــــــرید بــــــــــــــــاقرؔ انصــــــــــــــــاری
.
.
avatar
Mr.TaRaR
Super Moderater
Super Moderater

Posts : 12
Join date : 2017-11-11
Age : 16

Back to top Go down

Back to top


 
Permissions in this forum:
You cannot reply to topics in this forum
Copyright© 2017 ITDunya.Net. All rights reserved.Powered By iTMasTER