جمھور حال

Go down

جمھور حال

Post by Mr.TaRaR on Wed Nov 15, 2017 11:53 am

راج کرنے دو ہمیں ،تاج سجے رہنے دو
ہم زمیں کےہیں خدا،ہم پہ یقیں رہنے دو
روز گلیوں میں جو مرتے ہیں،انہیں مرنے دو
ان کی فطرت میں ہے ماتم،سو انہیں کرنے دو
انہیں لعنت میں غلامی کی پڑارہنے دو
ہے جہالت تو جہالت کی سزا سہنے دو
جب یہی طے ہے،ہمیں لکھنی ہے قسمت ان کی
ان کی نسلوں میں یہی پیٹ کا غم رہنے دو
چھین لو انکی زباں،اندھاانہیں رہنے دو
ایسا لاچار کرو،کاسہ نشیں رہنے دو
انہیں بتلاو کہ جمھور ہمارا کیا ہے
سانس انکی ہےمگر ،بس میں ہمارے ہوگی
نہ کوئی خواب کسی آنکھ میں بسنے پائے
نہ کوئی راہ بغاوت پہ نکلنے پائے
اب یہاں سرنہ کبھی کوئی بھی اٹھنے پائے
کوئی چنگاری کبھی شعلہ نہ بننے پائے
بات حق کی جو کرے اسکوجلاکے رکھ دو
سوچنا جرم لکھو،سوچ مٹاکے رکھ دو
مانا جنگل ہے مگراسکو بسا رہنے دو
الٹی گنگا نہ کہو،دیکھو اسے بہنےدو
انکو لاشوں کی طرح زندہ گڑارہنےدو
ہمیں دن رات یہاں جشن بپا کرنے دو
جب تلک ہیں یہ محل،عیش ہیں قائم اپنے
تخت گر چھوٹ گئے،دار ٹھکانہ ہو گا
avatar
Mr.TaRaR
Super Moderater
Super Moderater

Posts : 12
Join date : 2017-11-11
Age : 16

Back to top Go down

Re: جمھور حال

Post by Admin on Wed Nov 15, 2017 8:17 pm

Very Nice Awesome
avatar
Admin
Administrator
Administrator

Posts : 44
Join date : 2017-10-17
Age : 23
Location : iTDunya.NeT

http://www.itdunya.net

Back to top Go down

Back to top


 
Permissions in this forum:
You cannot reply to topics in this forum
Copyright© 2017 ITDunya.Net. All rights reserved.Powered By iTMasTER